Accessibility

Accessibility

Website Zoom

Color/Contrast

Download Reader

The National Assembly Session has been prorogued on Wednesday, the 10th July, 2024
Print Print

National Assembly Committee Advocates for Transparency for Equitable National Development

Tuesday, 9th July, 2024

Islamabad, July 9, 2024: In a bid to enhance equitable national development, Syed Abdul Qadir Gillani, Chairman of the National Assembly Standing Committee on Planning, Development & Special Initiatives, emphasized the need for transparency in Public Sector Development Projects (PSDP). He directed that the Committee be kept informed of any changes in PSDP and highlighted the importance of transparent provincial distribution of development projects for equitable resource allocation. The Chairman also reiterated the Committee’s commitment to effectively oversee the Ministry for the public's benefit.

2. These remarks were made during the second meeting of the Standing Committee on Planning, Development & Special Initiatives, held today at 11:00 a.m. in Parliament House under the Chairmanship of Syed Abdul Qadir Gillani.
3. Mr. Ahsan Iqbal, Minister for Planning and Development, emphasised the importance of peace, political stability, and policy continuity for Pakistan's prosperity. He introduced the "5 E" framework as crucial for future growth of the country, focusing on Exports-led growth, E-Pakistan, Environment and Climate Change, Energy, and Equity, Ethics, and Empowerment.

4. The Secretary of the Ministry of Planning and Development provided a comprehensive overview of the Ministry’s functions and its attached departments. He elucidated that while the Ministry is responsible for planning and coordination, project implementation falls under the purview of other ministries. However, the Ministry is responsible for monitoring and evaluation of these projects.
5. The Committee raised concerns over Karachi’s industrial sector decline due to the energy crisis and identified corruption as a major cause of public sector project delays. It was recommended that priority be given to completing ongoing projects rather than reallocating funds to new projects, to avoid cost escalations and ensure timely completion. Regional disparities in South Punjab's development was also discussed.
6. The Committee was briefed on the status of the Pakistan Public Works Department (PWD), currently undergoing dissolution. It was decided that PWD representatives would be called to provide updates on their existing projects.
7. The meeting was attended by MNAs Ms. Naz Baloch, Maj. (R) Tahir Iqbal, Mr. Muhammad Ameer Sultan, Mr. Ali Asghar Khan, Mr. Yousaf Khan, Mr. Dawar Khan Kundi, Ch. Muhammad Shahbaz Babar, and Mr. Muhammad Moazzam Ali Khan along with senior officials from the Ministry.

 

اسلام آباد، 9 جولائی، 2024: مساوی قومی ترقی کو بڑھانے کے لیے قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے منصوبہ بندی، ترقی اور خصوصی اقدامات کے چیئرمین سید عبدالقادر گیلانی نے پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ پروجیکٹس میں شفافیت کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے ہدایت کی کہ پی ایس ڈی پی میں کسی بھی تبدیلی سے کمیٹی کو آگاہ رکھا جائے۔  انہوں نے وسائل کی منصفانہ تقسیم کے لیے صوبوں کے درمیان ترقیاتی منصوبوں کی تقسیم میں شفافیت کی اہمیت کو اجاگر کیا۔ چیئرمین نے اس بات کا بھی اعادہ کیا کہ کمیٹی عوام کے فائدے کے لیے وزارت کی مؤثر نگرانی کے لیے پرعزم ہے۔

یہ ریمارکس قائمہ کمیٹی برائے منصوبہ بندی، ترقی اور خصوصی اقدامات کے دوسرے اجلاس کے دوران کہے جو آج صبح گیارہ بجے پارلیمنٹ ہاؤس میں سید عبدالقادر گیلانی کی صدارت میں منعقد ہوا۔

منصوبہ بندی اور ترقی کے وزیر جناب احسن اقبال نے پاکستان کی خوشحالی کے لیے امن، سیاسی استحکام اور پالیسی کے تسلسل کی اہمیت پر زور دیا۔ انہوں نے" ای5 “ فریم ورک کو ملک کی مستقبل کی ترقی کے لیے اہم قرار دیا، جس میں برآمدات کی قیادت میں ترقی، ای پاکستان، ماحولیات اور موسمیاتی تبدیلی، توانائی، اور مساوات، اخلاقیات اور بااختیاریت پر توجہ دی گئی۔


منصوبہ بندی اور ترقی کی وزارت کے سیکرٹری نے وزارت کے فرائض اور اس سے منسلک محکموں کا ایک جامع جائزہ پیش کیا۔ انہوں نے واضح کیا کہ جہاں وزارت منصوبہ بندی اور رابطہ کاری کی ذمہ دار ہے، پروجیکٹ پر عمل درآمد دیگر وزارتوں کے دائرہ کار میں آتا ہے۔ تاہم، وزارت ان منصوبوں کی نگرانی اور تشخیص کی ذمہ دار ہے۔

کمیٹی نے توانائی بحران کی وجہ سے کراچی کے صنعتی شعبے کی زوال پر تشویش کا اظہار کیا اور پبلک سیکٹر کے منصوبوں میں تاخیر کی بڑی وجہ کرپشن کو قرار دیا۔ یہ سفارش کی گئی کہ نئے منصوبوں کے لیے فنڈز دوبارہ مختص کرنے کی بجائے جاری منصوبوں کو مکمل کرنے کو ترجیح دی جائے، تاکہ لاگت میں اضافے سے بچا جا سکے اور بروقت تکمیل کو یقینی بنایا جا سکے۔ جنوبی پنجاب کی ترقی میں علاقائی تفاوت پر بھی بات ہوئی۔


کمیٹی کو پاکستان پبلک ورکس ڈیپارٹمنٹ کی صورتحال کے بارے میں بتایا گیا جو اس وقت تحلیل کے عمل سے گزر رہا ہے۔ یہ فیصلہ کیا گیا کہ کے پی ڈبلیو ڈی نمائندوں کو ان کے موجودہ پروجیکٹوں کے بارے میں اپ ڈیٹ فراہم کرنے کے لیے بلایا جائے گا۔

اجلاس میں ایم این ایز محترمہ ناز بلوچ، میجر (ر) طاہر اقبال، جناب محمد امیر سلطان، جناب علی اصغر خان، جناب یوسف خان، جناب داور خان کنڈی،
چوہدری محمد شہباز بابر، اور جناب محمد معظم علی خان سمیت وزارت کے اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔