Accessibility

Accessibility

Website Zoom

Color/Contrast

Download Reader

The Sitting of the National Assembly has been adjourned to meet again on Thursday, the 20th June, 2024, at 5:00 p.m.
Print Print

NA Parliamentary Delegation led by Speaker Sardar Ayaz Sadiq meets with President of Iran Dr. Seyyed Ebrahim Raisi

Monday, 22nd April, 2024

Political parties across board are united to  safeguard Pakistan's interest and its dignity says NA Speaker

Pak-Iran ties are rooted in eternal  brotherhood, love and neighborliness : President of President of Iran Dr. Seyyed Ebrahim Raisi

Islamabad, April 22, 2024: Speaker National Assembly Sardar Ayaz Sadiq has said that all  political parties across board are unanimous and united to safeguard the honor, dignity and interests of Pakistan.He said that Pakistan values high  its historical fraternal relations with Iran and is keen to  expand the existing relations by promoting parliamentary and economic ties. He expressed his confidence that the visit of President of Iran Dr. Seyyed Ebrahim Raisi to Pakistan would not only enhance the relations between the two Islamic brother countries but also among others regional countries due to its far reaching impacts. He expressed these views during his meeting with President of Iran Dr. Seyyed Ebrahim Raisi who is on official visit to  Pakistan.Pakistani Parliamentary delegation comprising of  members of all the political parties were also present in the meeting.

The Speaker warmly welcomed the Iranian President on behalf of the parliament and the people of Pakistan. He said that sustainable peace in the region is hinged upon resolution of bilateral issues amicably through dialogue. Further, he said that there are vast opportunities for mutual cooperation in trade, energy and other sectors, which are essential for development and prosperity of the people of both the countries. He hailed the establishment of trade centers on both sides of the Pakistan-Iran border and said that the establishment of trade centers on the Pakistan-Iran border will bring prosperity to the lives of the citizens living on both sides of the border. Moreover, He said that people to people and parliament to Parliament contacts play pivotal role in rendering bilateral relations more stable.
President of Iran Dr. Seyyed Ebrahim Raisi expressed his excitedness to visit  Pakistan. He said that the Pak-Iran ties are more than the traditional and diplomatic relations as the people of the countries are bound in eternal relations of brotherhood, neighborliness and love. He thanked the people and government of Pakistan for the warm welcome and hospitality extended to him and his delegation in Pakistan. He said that close ties between the two countries will usher in a new era of regional development and prosperity.

While talking on the occasion, MNA Syed Naveed Qamar said that Pakistan values high its parliamentary contacts with Iran. He further said that the Parliament of Pakistan aimed to promote relations with Iran's National Assembly.  Members of National Assembly Syed Naveed Qamar, Mr. Aoon Chaudhry, Malik Muhammad Amir Dogar, Noor Alam Khan, Sahibzada Hamid Raza, Khalid Hussain Magsi, Chaudhry Salik Hussain, Dr. Tariq Fazal Chaudhry were also present in the meeting.
 

اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کی صدارت میں  قومی اسمبلی کے پارلیمانی وفد کی ایرانی صدر سید ابرھیم رئیسی سے ملاقات۔

پاکستان کی عزت ،وقار اور مفادات کے تحفظ کےلیے ملک کی تمام سیاسی قوتیں متحد ہیں،اسپیکر قومی اسمبلی

پاک۔ایران تعلقات اخوت، محبت  اور ہمسائیگی کے  لازوال رشتوں میں بندھے ہوئے،صدر ابراھیم رئیسی

اسلام آباد، 22اپریل، 2024: اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے کہا کہ پاکستان کی عزت، وقار اور مفادات کے تحفظ کے لیے ملک کی تمام سیاسی قوتیں متحد ہیں۔انہوں نے کہا کہ پارلیمان میں موجود تمام سیاسی جماعتیں ایران کے ساتھ اپنے تعلقات کو انتہائی قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ایران کے ساتھ اپنے تاریخی برادرانہ تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے اور  پارلیمانی و اقتصادی رابطوں کے فروغ کے ذریعے موجودہ تعلقات کو مزید وسعت دینے کا خواہاں ہے۔ انہوں نے ایرانی صدر سید ابرھیم رئیسی کے حالیہ دورہ پاکستان کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے اس اعتماد کا اظہار کیا کہ صدر سید ابرھیم رئیسی کے دورہ پاکستان سے نا صرف دونوں برادر اسلامی ممالک میں تعلقات میں اضافہ ہوگا بلکہ اس دورے کے خطے کے دیگر ممالک پر بھی دور رس نتائج مرتب ہونگے ۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار پاکستان کے دورے پر آئے ہوئے ایران کے صدر سید ابرھیم رئیسی کے ساتھ اپنی ہونے والی ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ملاقات میں اسپیکر قومی اسمبلی کے ہمراہ قومی اسمبلی میں موجود تمام سیاسی جماعتوں کے اراکین پر مشتمل وفد بھی موجود تھا۔

اسپیکر نے ایرانی صدر کو پاکستان میں میں آمد پر پاکستان کی پارلیمان اور  عوام کی طرف خوش آمدید کہا۔ انہوں نے کہا کہ خطے میں پائیددار  امن کے قیام  اور  ترقی کے لیے دوطرفہ  مسائل کو بات چیت کے ذریعے خوش اسلوبی سے حل کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ تجارت، توانائی اور دیگر شعبوں میں باہمی تعاون کے وسیع مواقع موجود ہیں  جنہیں دونوں ممالک کی عوام کی ترقی اور خوشحالی کے لیے بروئے کار لایا جا سکتا ہے۔ انہوں نے پاک-ایران سرحد کے دونوں طرف تجارتی مراکز کے قیام خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ پاک-ایران سرحد پر تجارتی مراکز کے قیام سے سرحد کی دونوں جانب بسنے والے شہریوں کی زندگیوں میں خوشحالی آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ عوامی اور پارلیمانی سطح پر  روابط دوطرفہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے میں اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔
 
ایران کے صدر سید ابرھیم رئیسی نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ برادر ملک پاکستان کا دورہ کر کے دلی خوشی ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور ایران کے مابین تعلقات روائتی اور سفارتی تعلقات سے بڑھ کر ہیں دنوں ممالک کے عوام  اخوت، بھائی چارے، ہمسائیگی اور محبت کے لازوال رشتوں میں بندھے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے پاکستان میں اپنے اور وفد کے پرتپاک استقبال اور مہمان نوازی پر پاکستان کی عوام اور حکومت کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان قریبی روابط سے خطے میں ترقی اور خوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہوگا۔

اس موقع پر رکن قومی اسمبلی سید نوید قمر نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان ایران کے ساتھ پارلیمانی روابط کو اہمیت دیتا ہے۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ قومی اسمبلی میں پاک۔ایران فرینڈ شپ گروپ سب سے بڑا اور فعال فریند شپ گروپس میں سے ایک تھا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کی پارلیمان ایرن کی ملی مجلس شوریٰ کے ساتھ روابط کو فروغ دینے کی خواہش رکھتی ہے ۔انہوں نے اس اعتماد کا اظہار کیا کہ موجوہ اسمبلی میں پاک۔ ایران فرینڈ شپ گروپ دونوں ممالک کی پارلیمانوں میں رابطوں کے فروغ کے لیے اہم کردار ادا کرے گا۔ پاکستانی وفد میں اسپیکر قومی اسمبلی کے علاوہ اراکین قومی اسمبلی سید نوید قمر، عون چوہدری ، ملک محمد عامر ڈوگر، نور عالم خان، صاحبزادہ حامد رضا، خالد حسین مگسی، چوہدری سالک حسین ، ڈاکٹر طارق فضل چوہدری  موجود تھے جبکہ ایرانی وفد میں ایران کابینہ کے اراکین  صدر کے ہمراہ موجود  تھے ۔