Accessibility

Accessibility

Website Zoom

Color/Contrast

Download Reader

The Sitting of the National Assembly has been adjourned to meet again on Thursday, the 20th June, 2024, at 5:00 p.m.
Print Print

Allama Muhammad iqbal's philosophy and poetry ;the beacon of guidance for whole Muslim ummah to realize shared dream of prosperity and development :NA Speaker and Deputy Speaker

Saturday, 20th April, 2024

The solution to the problems faced by the Muslim Ummah lies in following the teachings of Allama Muhammad Iqbal Says NA Speaker  Sardar Ayaz Sadiq

Islamabad, April 20, 2024: Speaker National Assembly Sardar Ayaz Sadiq and Deputy Speaker Syed Ghulam Mustafa Shah have said that Allama Muhammad Iqbal, the poet of the East, was a great poet and thinker who kindled the spirit of freedom in the Muslims of the subcontinent through his poetry and thoughts. They said that Allama Iqbal's poetry and ideas are still a beacon of hope for the Muslim Ummah, inspiring guidance to grapple with present challenges.They expressed these views in their separate messages on the occasion of Allama Muhammad Iqbal's 86th death  anniversary.

The Speaker said that Allama Muhammad Iqbal was the visionary thinker of Pakistan who presented the concept of an independent Muslim state for the Muslims of the subcontinent, which was later realized  in the form of  creation of Pakistan. He also reminded that Allama Muhammad Iqbal  persuaded Quaid-i-Azam Muhammad Ali Jinnah to take over the leadership of the Muslim freedom movement of the sub-continent, and thanks to his leadership ability, the dream of an independent Muslim state was realized.

The Speaker said that the Muslim Ummah is currently passing  through a difficult period, with Muslims in Palestine and Kashmir suffering from cruelty and brutality.  He added," Allama Iqbal's teachings offer a vision of a more just and harmonious society, where Muslims can live with dignity and respect."

The Speaker said that Allama Iqbal's concept of Islamic society is universal and beyond the limitations of geography and nationality. He always emphasized unity among Muslims and believed that there is no room for prejudice and extremism. He wanted to establish a peaceful and moderate society in which justice and equal rights are provided  without discrimination of caste and religion.The Speaker said that Allama Muhammad Iqbal's efforts to unite the Muslim Ummah, especially the Muslims of the sub-continent, will always be remembered in annals of history .

On this occasion,Deputy Speaker Syed Ghulam Mustafa Shah said that Allama Iqbal was the thinker of Pakistan, and his poetry is still a torchbearer for the young generation. He underscored, "His ideas continue to inspire and motivate us to work towards a brighter future for Pakistan and the Muslim Ummah."

 

 

شاعر مشرق علامہ اقبال نے  اپنی شاعری اور افکار کے ذریعے برصغیر کے مسلمانوں میں  آزادی کا جذبہ پیدا کیا،سپیکر و ڈپٹی سپیکرقومی اسمبلی

مسلم اُمہ کو درپیش مسائل کا حل علامہ محمد اقبال کی تعلیمات میں مضمر ہے، سردار ایاز صادق

اسلام آباد، 21 اپریل  2024: اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق اور ڈپٹی اسپیکر سید میر غلام مصطفیٰ شاہ نے کہا ہے کہ شاعر مشرق علامہ محمد اقبال عظیم شاعر اور  مفکر تھے انہوں نے  اپنی شاعری اور افکار کے ذریعے برِصغیر کے مسلمانوں کو خواب غفلت سے جگایا اور ان میں آزادی کا جذبہ پیدار کیا۔   انہوں نے کہا کہ علامہ محمد اقبال کی شاعری دور حاضر  میں بھی مسلم اُمہ کے لیے مشعل راہ کی حیثیت رکھتی ہے، ان کے افکار و نظریات  پر عمل پیرا ہو کر مسلم اُمہ کو درپیش مسائل کو حل کیا جاسکتا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے علامہ محمد اقبال کی 86 ویں برسی کے موقع پر اپنے علیحدہ علیحدہ پیغامات میں کیا جو ہر سال21 اپریل کو ملک بھرمیں عقیدت و احترام سے منائی جاتی ہے۔

اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق  نے کہا کہ مفکر پاکستان  علامہ محمد  اقبال وہ عظیم رہنما تھے، جنہوں نے برصغیر کے مسلمانوں کیلئے ایک آزاد مسلم ریاست کا تصور پیش کیا، جو آگے چل کر پاکستان کی شکل میں معرض وجود میں آئی۔ انہوں نے کہا کہ علامہ محمد اقبال نے قائد اعظم محمد علی جناح  کو برصغیر کے مسلمانوں  تحریک آذادی کی قیادت سنبھالنے پر آ آمادہ کیا جن کی    قائدانہ صلاحیت کی بدولت  ایک آزاد مسلم ریاست کا خواب شرمندہ تعبیر ہوا۔انہوں نے کہا کہ شاعر مشرق کا مسلمانوں کے لیے علیحدہ وطن کا خواب جہاں وہ اپنے مذہبی عقائد اور رسم و رواج کے مطابق زندگی بسر کر سکیں کسی نعمت سے کم نہیں تھا۔

اسپیکر نے کہا کہ اس وقت  مسلم اُمہ ایک مشکل دور سے گزر رہی ہے، فلسطین اور کشمیر میں مسلمان ظلم و بربریت کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ مسلم اُمہ کو درپیش مسائل کا حل   حکیم الامت علامہ محمد اقبال کی تعلیمات ونظریات میں مضمر ہیں جن اپنا کر  مسلم اُمہ کو درپیش مسائل سے حل نکالا جاسکتا ہے۔
 
اسپیکر نے کہا کہ علامہ اقبال کا اسلامی معاشرے کا تصور کائناتی ہے اور جغرافیائی اور قومیت کی حدود و قیود سے بالا تر ہے۔ انہوں نے کہا کہ علامہ اقبال نے ہمیشہ اتحاد بین المسلمین پر زور دیا اور ان کے نزدیک تعصب اور انتہا پسندی کی کوئی گنجائش نہیں۔ انہوں نے کہا کہ علامہ اقبال ایک ایسے پرامن اور اعتدال پسند معاشرے کا قیام چاہتے تھے جس میں بلا امتیاز ونسل اور مذہب و انصاف پر مبنی مساوی حقوق میسر ہوں۔ انہوں نے کہا کہ مسلم امہ خصوصاً بر صغیر کے مسلمانوں کو متحد کرنے کے لیے علامہ محمد اقبال کی جہدوجہد اور کوششوں کو تاریخ میں ہمیشہ سنہرے حروف میں یاد رکھا جائے گا۔

اس موقع پر ڈپٹی اسپیکر سید میر غلام مصطفیٰ شاہ نے کہا کہ علامہ اقبال مفکر پاکستان  تھے  انھوں نے 1930 میں اپنے خطبہ آلہ آباد میں ایک آزاد مسلم ریاست کا تصور دیا جو آگے چل کر پاکستان کی صورت میں معرض وجود میں آیا۔ انہون نے کہا کہ علامہ اقبال کی شاعری آج بھی نوجوان نسل کے لیے مشعل راہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ علامہ اقبال کی تعلیمات کو اپنا کر مسلم اُمہ خصوصاً پاکستان  کو درپیش چیلنجز  پر قابو پایا جا سکتا ہے۔